رہف القنون: جب ٹوئٹر نے ایک سعودی خاتون کی جان بچائی

2

پانچ جنوری کی شام ایک نئے ٹوئٹر اکاؤنٹ سے ایک پیچیدہ صورتحال واضح ہونا شروع ہوئی جب بینکاک میں ہوٹل کے ایک کمرے میں خود کو بند کرنے والی 18 سالہ رہف محمد القنون نے سلسلہ وار ٹویٹس کے ذریعے مدد کی درخواست کی۔

اپنی رائے دیجئے

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.